fbpx

براڈ شیٹ اسکینڈل: سابق پراسیکیوٹر نیب کے بیٹے کا اعتراف

Broadsheet Scandal

Broadsheet Scandal

اسلام آباد (اصل میڈیا ڈیسک) نیب کے سابق پراسیکیوٹر جنرل فاروق آدم خان کے بیٹے عمر فاروق نے براڈشیٹ سے تعلق رکھنے والی فرم آرچرڈسالیسیٹرز کے لیے کام کرنے کا اعتراف کر لیا۔

سابق پراسیکیوٹر جنرل نیب فاروق آدم کے بیٹے عمر فاروق نے اعتراف کیا کہ انہوں نے براڈشیٹ سے منسلک آرچرڈ سالیسیٹرز لندن کے ساتھ 2000 میں انٹرن شپ اسکیم کے تحت کام کیا تاہم براڈشیٹ سے منسلک لاء فرم سے انٹرن شپ بغیر مالی فوائد کے کی تھی۔

عمر فاروق نے کہا کہ ان کی انٹرن شپ کی کوئی بات مخفی نہیں ہے، اس میں کوئی مالی فوائد نہیں تھے بلکہ کام کا تجربہ حاصل کرنے کے لیے انٹرن بنے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ میرے والد سے متعلق 2015 کا حلف نامہ بدنیتی پر مبنی تھا اور اثاثہ بازیابی معاہدہ بالکل درست تھا۔

واضح رہے کہ براڈشیٹ کے ساتھ معاہدہ نیب کے اس وقت کے پراسیکیوٹر جنرل فاروق آدم خان نے تیار کیا تھا۔