fbpx

ورلڈکپ کا التوا پی ایس ایل 6 پر بھی بھاری پڑے گا

PSL

PSL

لاہور (اصل میڈیا ڈیسک) ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کا التوا پی ایس ایل 6 پر بھی بھاری پڑے گا،آئندہ سال فروری، مارچ میں انعقاد کا فیصلہ ہوا تو پاکستان کو اپنی لیگ کے لیے نئی ونڈو تلاش کرنا ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق آئندہ برس پاکستان سپر لیگ کا بروقت انعقاد خطرے میں پڑ گیا، ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ رواں سال اکتوبر، نومبر میں آسٹریلیا میں شیڈول ہے، کورونا وائرس کی وجہ سے مسائل کے پیش نظر انعقاد ممکن نظر نہیں آرہا،اگر آسٹریلوی حکومت نے ستمبر کے وسط میں سرحدیں کھولنے کا فیصلہ کر بھی لیا تب بھی16 ملکوں سے ٹیموں کی آمد، بائیو سیکیور ماحول میں نقل و حمل اور قیام و طعام کی سہولیات کا انتظام انتہائی مشکل ہوگا،اس صورتحال میں امکان یہی ہے کہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ ملتوی کردیا جائے، نئی ممکنہ ونڈو کے طور پر فروری، مارچ کو دیکھا جا رہا ہے۔

آسٹریلیا کے ساتھ کورونا فری نیوزی لینڈ کو بھی آئی سی سی ایونٹ کا میزبان بنائے جانے کا آپشن موجود ہے، کیویز کے دیس میں ویمنز ون ڈے ورلڈ کپ بھی فروری، مارچ میں ہی شیڈول ہے، مینز ایونٹ کا فیصلہ ہونے پر اس کی قربانی دینا پڑے گی، شیڈول آئندہ سال ہونے والی پی ایس ایل6 سے بھی متصادم ہوگا۔

ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کا فروری، مارچ میں انعقاد ہوا تو پی سی بی کو اپنی لیگ کیلیے نئی ونڈو تلاش کرنا پڑے گی۔یاد رہے کہ آئی سی سی کی گذشتہ میٹنگ میں میگا ایونٹ کے بارے میں فیصلہ موخر کردیا گیا تھا، متبادل پلان زیر غور ہیں، دوسری جانب بھارت بڑی شدت سے ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے التوا کا منتظر ہے تاکہ ملتوی ہونے والی آئی پی ایل کا رواں سال کے آخر میں انعقاد ممکن بنا سکے۔