fbpx

دادو: پی ایس 86 میں پولنگ کا آغاز، پی پی اور پی ٹی آئی میں کانٹے کا مقابلہ

Election Polling

Election Polling

دادو (اصل میڈیا ڈیسک) سندھ کے ضلع دادو پی ایس 86 میں ضمنی انتخابات کے لئے پولنگ کا آغاز ہو گیا، پاکستان پیپلزپارٹی پارٹی اور تحریک انصاف کے امیدواروں میں کانٹے کا مقابلہ متوقع ہے۔

پی ایس 86 ضمنی انتخاب میں پولنگ کا عمل بغیر کسی وقفے کے شام 5 بجے تک جاری رہے گا۔ ضمنی انتخابات کے لیے حلقے میں 158 پولنگ سٹیشنز قائم کئے گئے ہیں جن میں سے 60 پولنگ اسٹیشنز حساس جبکہ 16 پولنگ اسٹیشنز انتہائی حساس قرار دیئے گئے ہیں۔

حلقے میں ایک لاکھ 99 ہزار 825 امیدوار حق راہ دہی کا استعمال کریں گے، ضمنی انتخاب کے لیے 1300 پولیس اہلکار جبکہ پاک فوج اور رینجرز کے 1100 اہلکار تعینات کیے گئے ہیں، پیپلز پارٹی کے رکن سندھ اسیمبلی غلام شاہ جیلانی کے انتقال کے بعد پی ایس 86 جوہی میں خالی نشست پر دوبارہ ضمنی انتخابات ہو رہے ہیں۔

وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کے چچا زاد بھائی سید صالح شاہ پیپلز پارٹی کے امیدوار ہیں، پی ایس 86 ضمنی الیکشن کے لیے امداد لغاری تحریک انصاف کے امیدوار ہیں، پی ایس 86 ضمنی انتخاب کے لیے ضلع بھر میں عام تعطیل ہے۔