fbpx
وہ سکون جسم وجاں گرداب جاں ہونے کو ہے
وہ ایک شخص کہ منزل بھی، راستا بھی ہے
کانٹوں سی اس دنیا میں وہ پھولوں جیسی
بھٹک رہی ہے عطا خلق بے اماں پھر سے
تھوڑی سی اس طرف بھی نظر ہونی چاہئے
منزلیں بھی، یہ شکستہ بال وپر بھی دیکھنا