fbpx
آٹو گراف
اس اپنی کرن کو آتی ہوئی صُبحوں کے حوالے کرنا ہے
روش روش پہ ہیں نکہت فشاں گُلاب کے پھول
بنے یہ زہر ہی وجہِ شفا، جو تو چاہے
بول انمول
دل سے ہر گزری بات گزری ہے
کاش میں تیرے بن گوش کا بُندا ہوتا
اک کوہستانی سفر کے دوران
جنونِ عشق کی رسمِ عجیب کیا کہنا
کون دیکھے گا
لاہور میں
منٹو
سازِ فقیرانہ
توسیعِ شہر
شاعر
مجید امجد