fbpx

پی ڈی ایم میں شامل 5 جماعتوں کا سینیٹ میں الگ اپوزیشن بلاک بنانے پر اتفاق

PDM Meeting

PDM Meeting

اسلام آباد (اصل میڈیا ڈیسک) اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) میں شامل مسلم لیگ (ن) سمیت 5 جماعتوں نے ایوان بالا (سینیٹ) میں 27 اپوزیشن سینیٹرز پر مشتمل الگ بلاک بنانے پر اتفاق کرلیا۔

سینیٹ میں ن لیگ کے پارلیمانی لیڈر اعظم نذیر تارڑ کا کہنا تھا کہ سینیٹ میں بلاک بنانے کا فیصلہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) میں شامل 5 جماعتوں کے سینیٹ کے رہنماؤں کے اجلاس میں کیا گیا۔

ان کا کہنا تھاکہ ن لیگ، جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی)، پشتونخوا ملی عوامی پارٹی، نیشنل پارٹی اور بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) مینگل نے سینیٹ میں اپوزیشن بلاک بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

اعظم نذیر کے مطابق پیپلزپارٹی اورعوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) سے وضاحت طلبی کیلئے صدرپی ڈی ایم سے بھی رجوع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ان کا کہنا تھاکہ اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ بی اے پی سے ووٹ لینے کا معاملہ صدر پی ڈی ایم کو بھجوایا جائے اور پی ڈی ایم سربراہ وضاحت طلب کریں کہ دونوں جماعتوں نے اصولوں اور فیصلوں کی خلاف ورزی کیوں کی؟

اعظم نذیرتارڑ کے مطابق 5جماعتوں کو توقع ہے کہ پی ڈی ایم سربراہ پی پی پی اور اے این پی سے باضابطہ وضاحت مانگیں گے۔

خیال رہے کہ اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے درمیان سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر کے معاملے پر اختلافات بڑھ رہے ہیں جبکہ پیپلزپارٹی کے یوسف رضا گیلانی اس وقت سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر ہیں۔

دو روز قبل ہی اپوزیشن اتحاد میں شامل مسلم لیگ (ن) اور جمعیت علماء اسلام (جے یو آئی) نے سینیٹ میں یوسف رضا گیلانی کو قائد حزب اختلاف نہ ماننے پر اتفاق کیا تھا۔